15.6 C
Islamabad
بدھ, مارچ 3, 2021

 عادات، جنہیں ہم اچھا سمجھ کر اپناتے ہیں، لیکن۔۔۔۔۔؟

تازہ ترین

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...
- Advertisement -

ہم اپنی صحت کو برقرار رکھنے کے لیے کئی عادات اپناتے ہیں، جن میں سے کئی عادتیں بہت زیادہ اہم ہوتی ہیں جیسا کہ پھل ہمیشہ دھو کر کھانے کی عادت یا پھر ورزش کرنا، جو بلاشبہ بہت اچھی عادتیں ہیں لیکن کچھ ایسی عادات بھی ہیں جن پر سوالیہ نشان موجود ہے۔ آئیے آپ کو 7 ایسی عام عادات کے بارے میں بتاتے ہیں جنہیں لوگ باآسانی چھوڑ سکتے ہیں، کیونکہ ان کا کوئی خاص فائدہ نہیں ہے۔

1۔ ملٹی وٹامنز کا استعمال


ملٹی وٹامنز اور تمام اقسام کی bio-additives نہ ہی آپ کو مختلف بیماریوں سے بچا سکتی ہیں اور نہ آپ کی یادداشت یا کام کرنے کی صلاحیت کو بہتر بنا سکتی ہیں۔ یہ نتیجہ امریکا میں سائنس دانوں نے 4,50,000 سے زیادہ افراد پر طبّی تجربات کرنے کے بعد اخذ کیا۔ ان نتائج کو دیگر تحقیق سے بھی تائید ملتی ہے جو بتاتی ہیں کہ روزانہ ملٹی وٹامنز لینے سے آپ کی صحت پر الٹا منفی اثر پڑ سکتا ہے۔


2۔ بنا الکحل ہینڈ سینیٹائزرز کا استعمال


جراثیم کُش ہینڈ جیلز کئی قسم کے جراثیم کا خاتمہ کرنے میں مدد دیتے ہیں لیکن ایسا صرف ان جیلز سے ہو سکتا ہے جن میں الکحل کی مقدار 60 فیصد سے کم نہ ہو۔ دیگر ہینڈ سینیٹائزرز کسی بھی قسم کے جراثیم کا خاتمہ نہیں کر سکتے، ان کا کوئی فائدہ نہیں ہوتا۔


3۔ مونو سوڈیم گلوٹیمٹ سے گریز

تحقیق ظاہر کرتی ہے کہ مونو سوڈیم گلوٹیمٹ (MSG) سے قے اور سر درد جیسی علامات انسانوں میں صرف اسی وقت ظاہر ہوتی ہیں جب اسے خالص شکل میں کم از کم 3 گرام استعمال کیا جائے۔ اب کسی بھی چیز میں آپ کو MSG کی اتنی زیادہ مقدار تو بمشکل ملے گی۔ ویسے بھی جن مصنوعات میں MSG شامل ہوتا ہے، وہ ویسے بھی آپ کے لیے اچھی نہیں ہوتیں، چاہے ان میں ‏MSG نہ ہو تب بھی۔


4۔ڈیٹوکس ڈائٹ


ڈیٹوکس ڈائٹ اس وقت بہت تیزی سے مقبول ہو رہی ہے، اس کے حوالے سے دعوے کیے جا رہے ہیں کہ یہ جسم میں موجود زہریلے مادّوں کا خاتمہ کرتی ہے۔ لیکن ماہرین کا اتفاق ہے کہ جسم ایسے مادّوں سے خود اپنے بل بوتے پر نمٹ سکتا ہے۔ اگر آپ کا جگر اور گردے ٹھیک کام نہیں کر رہے تو آپ کو ڈاکٹر کے پاس جانا چاہیے، صرف خوراک میں تبدیلی سے کام نہیں چلے گا۔


5۔ نامیاتی مصنوعات کا استعمال


پاکستان جیسے ملک میں قانوناً کسی نامیاتی (organic) پروڈکٹ کو نشان زد کرنا لازمی نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ اگر آپ کو کسی پروڈکٹ پر "eco” یا "bio” لکھا نظر آئے تو یاد رکھیں کہ یہ محض مارکیٹنگ کا ایک طریقہ ہے، اس بات کی ضمانت نہیں کہ کھانے کی یہ پروڈکٹ کیمیائی مادّوں کے استعمال کے بغیر بنائی گئی ہے۔ درحقیقت مارکیٹ سے خریدے گئے عام پھلوں اور سبزیوں اور ایسی "eco” یا "bio” پھلوں اور سبزیوں میں کوئی فرق نہیں۔


6۔ مائیکرو ویوز کا استعمال نہ کرنا


کہا جاتا ہے کہ کھانا گرم کرنے کے لیے مائیکروویوز کا استعمال ان میں موجود غذائیت کا خاتمہ کر دیتا ہے لیکن یاد رکھیں کہ اوون یا چولہے پر کھانا گرم کرنے سے بھی ایسا ہی ہوتا ہے۔ لیکن کیونکہ مائیکروویوز سے کھانا جلد گرم ہو جاتا ہے اس لیے اسے ترجیح دینی چاہیے کیونکہ جتنی جلدی کھانا گرم ہوگا، غذائیت کے بچنے کا امکان اتنا زیادہ ہوگا جیسا کہ مائیکروویوز کے استعمال سے وٹامن سی وغیرہ محفوظ رہتے ہیں۔


7۔ صرف کم چکنائی کی حامل مصنوعات کا استعمال


نشاستے (کاربوہائیڈریٹس) اور لحمیات (پروٹینز) کی طرح ہمارے جسم کو چکنائی (فیٹس) کی بھی ضرورت ہوتی ہے۔ اس لیے عام مصنوعات کی جگہ صرف لو-فیٹ پروڈکٹس استعمال کرنا ہی کیلوریز کم کرنے کا واحد ذریعہ نہیں ہے۔ پھر کئی مصنوعات ایسی ہیں کہ جن میں لو-فیٹ صلاحیت دراصل شوگر کونٹینٹ بڑھا کر حاصل کی جاتی جاتا ہے، جو صحت کے لیے ویسے ہی نقصان دہ ہے۔

مزید تحاریر

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے