16.6 C
Islamabad
بدھ, مارچ 3, 2021

کم خرچ بالا نشین، سب سے زیادہ منافع حاصل کرنے والی فلمیں

تازہ ترین

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...
- Advertisement -

تاریخ میں کس فلم نے سب سے زیادہ منافع کمایا؟ اسے جانچنے کے دو پہلو ہیں ایک تو یہ کہ تاریخ میں سب سے زیادہ کمانے والی فلموں کے نام لکھ دیں اور یوں جیمز کیمروں کی ساری فلمیں فہرست میں شامل کر لیں یا پھر حقیقی منافع کی طرف دیکھیں کہ بجٹ کے مقابلے میں فلم نے کتنے فیصد زیادہ کمایا کیونکہ اگر 5 ملین ڈالرز میں بننے والی فلم دنیا بھر میں 370 ملین ڈالرز کما لے تو واقعی یہ غیر معمولی بات ہے۔ تو ہم اسی لحاظ سے سب سے زیادہ منافع کمانے والے فلموں کی ایک فہرست مرتب کر رہے ہیں۔ آئیے دیکھتے ہیں کہ کن فلموں نے اپنے اخراجات کے مقابلے میں سب سے زیادہ منافع کمایا۔

Jaws

اسٹیون شپیل برگ کی مشہورِ زمانہ فلم Jaws، اسے بنا کر انہوں نے بڑا خطرہ مول لیا تھا اور کہا جاتا ہے کہ ناکامی کی صورت میں شپیل برگ کا کیریئر ہی ختم ہو جاتا۔ کھلے پانیوں میں اس طرح شوٹنگ کرنا جو پہلے کبھی نہیں کی گئی، پروڈکشن میں تاخیر اور بجٹ کا حد سے کہیں زیادہ ہو جانا، یہ سب اس فلم کے بڑے مسائل تھے لیکن شپیل برگ ڈٹے رہے، راتوں کو جاگتے اور سیٹ پر ہدایات دیتے ہوئے انہوں نے کئی خطرے مول لیے اور نتیجہ نکلا 1,308 فیصد منافع کی صورت میں۔ آج کے لحاظ سے افراطِ زر کو ملا لیں تو 34 ملین ڈالرز کے بجٹ پر Jaws نے کُل 471 ملین ڈالرز کی آمدنی حاصل کی۔ بس نقصان صرف اتنا ہوا کہ اس فلم کی وجہ سے لوگ سمندر میں جاتے ہوئے ڈرنے لگے۔


Home Alone

اس فلم کی کامیابی متوقع تھی۔ جان ہیوز کی ہر کہانی کا ویسے تو حقیقت سے دُور پرے کا کوئی تعلق نہیں ہوتا لیکن اس فلم کے ہٹ ہونے کی وجہ تھی زبردست اداکاری، دلچسپ کہانی اور لازوال مزاح۔ آپ سوچ سکتے ہیں کہ کسی دوسرے انسان کو سخت تکلیف میں دیکھ کر آخر کیا مزا آتا ہے؟ یہ ہمیں بھی کبھی سمجھ نہیں آیا۔ بہرحال، پروڈکشن اسٹوڈیو کو بھی اتنی کامیابی کی امید نہیں تھا، اس نے بھی 15 ملین ڈالرز کا بجٹ دیا جو آج کے حساب سے تقریباً 30 ملین ڈالرز بنتے ہیں۔ لیکن پھر انہونی ہو گئی، لوگوں نے اس فلم کو بہت پسند کیا اور اس نے 477 ملین ڈالرز کمائے۔


Passion of the Christ

میل گبسن کی یہ مذہبی فلم کُل 35 ملین ڈالرز کی پروڈکشن تھی اور اس نے باکس آفس پر بہت عمدہ کارکردگی دکھائی۔ دنیا بھر میں اس نے کُل 612 ملین ڈالرز کمائے، یعنی 1,749 فیصد کا منافع حاصل کیا۔ بس یہ سمجھ نہیں آئی کہ میل گبسن نے اس سلسلے کی اگلی فلم کیوں نہیں بنائی؟


American Beauty

سیم مینڈس کسی تعارف کے محتاج نہیں ہے، ابھی حال ہی میں ان کی فلم 1917 نے دنیا کو حیران کیا ہے۔ لیکن اس کی جس فلم نے چھپڑ پھاڑ کمائی کی، وہ 1999ء کی ‘American Beauty’ تھی۔ صرف 20 ملین ڈالرز سے بنائی جانے والی اس فلم نے کُل 356 ڈالرز کمائے۔


Star Wars

1977ء ایک حیران کُن سال تھا، اس سال نے دنیا کو ایک دُور دراز "کہکشاں” کا دیدار کروایا اور ہدایت کار جارج لوکس کو اتنا مالا مال کیا کہ انہوں نے بچپن میں اس کا خواب بھی نہیں دیکھا ہوگا۔ اگر ہم آج کے لحاظ سے حساب کریں انہوں نے یہ فلم 40 ملین ڈالرز سے بنائی تھی، لیکن کمائے کُل 775 ملین ڈالرز! اور یاد رکھیں کہ اسٹار وارز سلسلے کی چھ فلموں میں صرف ایک ہے۔

کا پتہ چلا اور اس فلم نے ایڈونچر کے شوقین افراد کے تخیل کو نئی راہیں دکھائیں۔ جارج لوکس اور ان کی ٹیم نے یہ فلم صرف 40 ملین ڈالرز میں بنائی تھی، جبکہ اس نے کل 775 ملین ڈالرز کمائے۔ یاد رہے کہ یہ چھ فلموں میں سے صرف ایک ہے۔


Slumdog Millionaire

ڈینی بوئیل کی اس فلم نے سینما کی تاریخ پر بہت گہرے نقوش چھوڑے۔ اس فلم کا مارکیٹنگ بجٹ نہ ہونے کے برابر تھا، اس لیے اس کی کامیابی بہت غیر معمولی تھی۔ 15 ملین ڈالرز کا بجٹ بالآخر 378 ملین ڈالرز کی کمائی میں بدلا، دیو پٹیل اور فریدا پنٹو کا کیریئر شروع ہوا، اکیڈمی آف آرٹس اینڈ سائنس نے فلم کو تاریخ میں ایک اہم مقام دیتے ہوئے 10 آسکرز کے لیے نامزد کیا اور اس نے بہترین فلم کے ایوارڈ کے ساتھ آٹھ ایوارڈز بھی جیتے۔ اور کیا چاہیے؟


My Big, Fat Greek Wedding

اس فلم کا شاید آپ نے نام بھی نہ سنا ہو۔ 2002ء کی یہ فلم ڈائریکٹر جوئیل زوئیک نے بنائی تھی، نیا وردالوس نے اس کی کہانی لکھی اور اس کو بنانے پر صرف 5 ملین ڈالرز خرچ کیے گئے، جو آج کس حساب سے تقریباً 6 ملین ڈالرز بنتے ہیں لیکن اس رومانٹک کامیڈی نے 369 ملین ڈالرز کمائے، یعنی اپنے بجٹ سے 60 گُنا زیادہ۔

مزید تحاریر

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے