15.6 C
Islamabad
بدھ, مارچ 3, 2021

ن لیگ کو جس پولنگ اسٹیشن پر اعتراض ہے، وہاں دوبارہ الیکشن کرالے، فواد چودھری

تازہ ترین

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...
- Advertisement -

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری کا کہنا ہے کہ قانونی طور پر الیکشن کمیشن آف پاکستان نتائج روکنے کا مجاز نہیں، پاکستان مسلم لیگ ن کو 23 پولنگ اسٹیشنز پر اعتراض ہے تو وہاں دوبارہ الیکشن کرالے، الیکشن کمیشن آزاد ادارہ ہے، ہم اس کا احترام کرتے ہیں۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں تحریک انصاف کے رہنما فرخ حبیب، عثمان ڈار اور اسجد ملہی کے ہمراہ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان سینیٹ انتخابات میں شفافیت چاہتے ہیں۔ پہلی بار ایسا ہوا ہے کہ وفاقی حکومت الیکشن میں ملوث نہیں ہے۔ وزیر اعظم عمران خان الیکشن کمیشن کو غیر جانبدار بنانا چاہتے ہیں۔ فواد چودھری نے کہا کہ ن لیگ نے اپنا موقف بدل لیا ہے، اب الیکشن کمیشن جانے اور وہ جانیں، آپ پھر کہیں کہ میں نہ مانوں اور اداروں پر چڑھائی کردیں۔ انہوں نے کہا کہ اب ہم الیکٹرانک ووٹنگ لارہے ہیں، ہمیں انتخابات میں اصلاحات کی طرف بڑھنا ہے۔

اس موقع پر وزیراعظم کے معاون خصوصی عثمان ڈار نے کہا کہ ہم ڈسکہ کے لوگوں کے فیصلے کا دفاع کریں گے۔ ن لیگ نے ہمیشہ کی طرح ڈسکہ الیکشن پر بھی بیانیہ تبدیل کیا۔ ڈسکہ کے لوگوں نے تحریک انصاف کو ووٹ دیا، 337 پولنگ اسٹیشن پر پہلے ن لیگ کو کوئی اعتراض نہیں تھا۔ تمام نتائج یہ لوگ تسلیم کرچکے تھے لیکن آج الیکشن کمیشن میں انہوں نے بڑا یوٹرن لیا۔ یہ لوگ الیکشن کو صرف متنازع بنانا چاہتے ہیں۔

اس سے قبل لیگی رہنما خواجہ سعد رفیق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ این اے 75 میں دھاندلی نہیں، دھاندلا کیا گیا۔ سرکاری فنڈز استعمال کر کے قبل از انتخاب دھاندلی کی گئی۔ ڈسکہ میں ضابطہ اخلاق کی کھلم کھلا خلاف ورزی ہوئی۔ فائرنگ کرکے ووٹرز میں خوف و ہراس پیدا کیا گیا، خوف و ہراس پھیلنے کی وجہ سے ڈسکہ میں ٹرن آؤٹ کم رہا، تحریک انصاف نے کوئی ضمنی الیکشن نہیں جیتا۔

مزید تحاریر

شاہد آفریدی کی ‘برتھ ڈے ٹوئٹ’، کہیں ریکارڈ نہ بدل جائے؟

شاہد آفریدی نے 25 سال پہلے اپنی پہلی ون ڈے اننگز میں صرف 37 گیندوں پر سنچری بنائی تھی، جو کرکٹ تاریخ کی تیز...

یوسف رضا گیلانی کو سینیٹ انتخابات میں فتح ہوگی، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن رہنما اور قائد حزب اختلاف پنجاب اسمبلی حمزہ شہباز کا کہنا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف میں اپنے ہی اراکین...

بھارت سے کپاس کی درآمد کا امکان، ٹیکسٹائل ملز ناخوش

لائن آف کنٹرول پر سیزفائر معاہدے کی بحالی کے بعد پاک-بھارت تعلقات کی مرحلہ وار بحالی کا امکان ہے اور ہو سکتا ہے کہ...

پاکستان اضافی بجلی سے بٹ کوائن بنا کر اپنا تمام قرضہ اتار سکتا ہے

حکومتِ پاکستان کا کہنا ہے کہ اس وقت ملک کی ضرورت سے زیادہ بجلی پوری ہو رہی ہے تو آخر پاکستان بٹ کوائن مائننگ...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے