22.2 C
Islamabad
منگل, اپریل 13, 2021

جہانگیر ترین کی حمایت کرنے والے ارکان کے نام محفوظ کرلیے گئے

تازہ ترین

ڈسکہ انتخاب کے بعد عوام بھی کہہ رہی ہے کہ گھر جاؤ، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن کے نائب صدر میاں حمزہ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ موجودہ حکمرانوں کے پاس اقتدار میں رہنے کا اب...

سندھ حکومت نے سعید غنی سے تعلیم کا قلمدان واپس لینے کا فیصلہ کرلیا

سندھ کی صوبائی حکومت میں وزیر تعلیم و لیبر سعید غنی سے محکمہ تعلیم کا قلمدان لینے کا فیصلہ کرلیا گیا، ساتھ ہی کابینہ...

ن لیگ کو چاہیے کہ پیپلز پارٹی جیسی سیاست کرے، فواد چودھری

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن احتجاجی سیاست سے باہر آکر پیپلز پارٹی جیسی سیاست...

پیپلز پارٹی کو نوٹس مسلم لیگ ن نے نہیں، پی ڈی ایم نے بھیجا تھا، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ جس کے لیے کہا جاتا تھا کہ سیاست ختم ہوگئی اس...
- Advertisement -

پاکستان تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین سے رابطے کرنے والے ارکان اسمبلی کی فہرست تیار کرلی گئی، جہانگیر ترین سے رابطے کرنے والے اراکین اسمبلی کا فیصلہ وزیراعظم عمران خان کریں گے۔

ذرائع کے مطابق پنجاب حکومت نے جہانگیر ترین کے حمایتی ارکان اسمبلی کی فہرست تیار کرلی ہے۔ وزیر اعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار اس حوالے سے آج اسلام آباد میں وزیراعظم عمران خان سے ملاقات بھی کریں گے۔

خیال رہے کہ جہانگیر ترین سے قومی اور صوبائی اسمبلی کے اراکین نے مسلسل رابطے شروع کردیے ہیں۔آج بروز بدھ چینی اسکینڈل میں نامزد ملزم جہانگیر ترین اور ان کے بیٹے علی ترین کیس کے حوالے سے بینکنگ کورٹ پہنچے تو ان کے ہمراہ وکلاء سمیت صوبائی وزراء بھی پیش ہوئے۔ جہانگیر ترین کے ساتھ صوبائی وزیر نعمان لنگڑیال، نذیر بلوچ، راجا ریاض، سلیمان نعیم، غلام بی بی بھروانہ، خرم لغاری، چوہدری افتخار گوندل، اسلم بھروانہ، طاہر رندھاوا اور امیر محمد خان شامل تھے۔

اس موقع پر رپورٹر کی جانب سے سوال کیا گیا کہ آپ کے ساتھ وزراء اور ایم پی ایز بھی آئے ہیں؟ جس پر جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ ان دوستوں نے مجھے فون کرکے کہا کہ آپ اکیلے کیوں جائیں گے، ہم نے آپ کے ساتھ جانا ہے۔اس حوالے سے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما سینیٹر شبلی فراز نے میڈیا پر اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ جہانگیر ترین کے ساتھ عدالت جانے والے ذاتی حیثیت میں گئے۔ یہ پارٹی کے لیے نہیں جہانگیر ترین کے لیے گئے ہیں، وزیر اعظم عمران خان کی نظر میں انصاف سب کے لیے برابر ہے۔

شبلی فراز کا مزید کہنا تھا کہ جہانگیر ترین پارٹی کے پرانے ممبر ہیں، ان کے ساتھ کئی لوگوں کے تعلقات ہیں۔ کوئی بھی ملک ترقی اس وقت کرسکتا ہے جب بلا تفریق اس ملک میں احتساب ہو۔اس سے قبل لاہور میں عدالت پیشی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے جہانگیر ترین کا کہنا تھا کہ میرے خلاف 3 بے بنیاد مقدمات بنائے گئے، مجھ پر بے بنیاد الزامات عائد کیے جارہے ہیں۔ جو بھی یہ سب کررہا ہے وقت آگیا ہے انہیں بے نقاب کیا جائے۔ دوست ہوں دوست رہنے دیں، ملک کی 80 شوگر ملز میں سے انہیں صرف جہانگیر ترین نظر آیا۔

مزید تحاریر

ڈسکہ انتخاب کے بعد عوام بھی کہہ رہی ہے کہ گھر جاؤ، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن کے نائب صدر میاں حمزہ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ موجودہ حکمرانوں کے پاس اقتدار میں رہنے کا اب...

سندھ حکومت نے سعید غنی سے تعلیم کا قلمدان واپس لینے کا فیصلہ کرلیا

سندھ کی صوبائی حکومت میں وزیر تعلیم و لیبر سعید غنی سے محکمہ تعلیم کا قلمدان لینے کا فیصلہ کرلیا گیا، ساتھ ہی کابینہ...

ن لیگ کو چاہیے کہ پیپلز پارٹی جیسی سیاست کرے، فواد چودھری

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن احتجاجی سیاست سے باہر آکر پیپلز پارٹی جیسی سیاست...

پیپلز پارٹی کو نوٹس مسلم لیگ ن نے نہیں، پی ڈی ایم نے بھیجا تھا، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ جس کے لیے کہا جاتا تھا کہ سیاست ختم ہوگئی اس...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے