22.2 C
Islamabad
منگل, اپریل 13, 2021

سب سے مختصر اور سب سے طویل روزہ کہاں ہوگا؟

تازہ ترین

ڈسکہ انتخاب کے بعد عوام بھی کہہ رہی ہے کہ گھر جاؤ، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن کے نائب صدر میاں حمزہ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ موجودہ حکمرانوں کے پاس اقتدار میں رہنے کا اب...

سندھ حکومت نے سعید غنی سے تعلیم کا قلمدان واپس لینے کا فیصلہ کرلیا

سندھ کی صوبائی حکومت میں وزیر تعلیم و لیبر سعید غنی سے محکمہ تعلیم کا قلمدان لینے کا فیصلہ کرلیا گیا، ساتھ ہی کابینہ...

ن لیگ کو چاہیے کہ پیپلز پارٹی جیسی سیاست کرے، فواد چودھری

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن احتجاجی سیاست سے باہر آکر پیپلز پارٹی جیسی سیاست...

پیپلز پارٹی کو نوٹس مسلم لیگ ن نے نہیں، پی ڈی ایم نے بھیجا تھا، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ جس کے لیے کہا جاتا تھا کہ سیاست ختم ہوگئی اس...
- Advertisement -

رواں سال رمضان کا مبارک مہینہ 13 اپریل بروز منگل سے شروع ہو رہا ہے۔ اس میں مسلمانانِ عالم صبحِ صادق سے لے کر غروبِ آفتاب تک روزہ رکھتے ہیں۔ یہ دن کے کتنے گھنٹے بنتے ہیں؟ اس کا انحصار اس بات پر کہ آپ کہاں رہتے ہیں؟ مثلاً رمضان کے ابتدائی ایام میں کراچی میں رہنے والوں کا روزہ تقریباً 14 گھنٹے کا ہوگا لیکن دنیا میں ایسے مقامات بھی ہیں کہ جہاں روزہ صرف 10 گھنٹے کا ہوگا یا ایسے مقامات بھی ہیں جہاں یہ 21 گھنٹے تک کا ہو سکتا ہے۔

صرف دن کے اوقات ہی نہیں، بلکہ سال کے ایام بھی رمضان میں مختلف ہوتے ہیں۔ کیونکہ ہجری تقویم عیسوی کیلنڈر سے چھوٹی ہوتی ہے، اس لیے ہر سال رمضان پچھلے سال کے مقابلے میں 10 سے 12 دن پہلے شروع ہوتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ روزے مختلف سالوں میں مختلف موسموں میں آتے ہیں۔ مثلاً اس سال 13 اپریل سے شروع ہونے والا رمضان 33 سال بعد 2054ء میں دوبارہ انہی دنوں میں آئے گا۔

اگر دورانیے کے اعتبار سے دیکھا جائے تو اس وقت دنیا کے انتہائی جنوب میں واقع ممالک میں روزہ بہت مختصر ہوگا، مثلاً جنوبی امریکا کے ملک چلی میں یا نیوزی لینڈ میں رہنے والے مسلمانوں کو صرف 10 سے 11 گھنٹے کا روزہ رکھنا پڑے گا جبکہ اس کے بالکل الٹ انتہائی شمال کے ممالک مثلاً آئس لینڈ اور ناروے میں روزے کا دورانیہ 18 گھنٹے سے بھی زیادہ ہوگا۔

الجزیرہ کے مطابق شمالی نصف کرّہ (northern hemisphere) میں رمضان اب ہر سال سردیوں کی طرف بڑھتے رہیں گے، یہاں تک کہ 2032ء میں سال کا مختصر ترین دن بھی رمضان میں آئے گا۔ لیکن خطِ استوا (equator) کے جنوب میں رہنے والے مسلمانوں کے لیے معاملہ الٹ ہے۔

انتہائی شمال میں ناروے کے علاقے لانگ ایئر بائین میں 20 اپریل سے 22 اگست تک سورج غروب ہی نہیں ہوتا۔ یہی وجہ ہے کہ علمائے کرام کی رائے میں یہاں رہنے والے مسلمانوں قریبی ترین مسلم ملک یا سعودی عرب میں مکہ مکرمہ کے اوقات کے حساب سے روزے رکھنے چاہئیں۔

انتہائی شمالی علاقوں میں گرین لینڈ کا دارالحکومت نوک ہے جہاں رواں سال 19 سے 20 گھنٹے کا روزہ ہوگا جبکہ آئس لینڈ کے دارالحکومت ریکیاوِک میں بھی دورانیہ تقریباً اتنا ہی ہوگا۔ پھر ہیلسنکی، فن لینڈ میں 18 سے 19 گھنٹے؛ اسٹاک ہوم، سوئیڈن؛ گلاسگو، اسکاٹ لینڈ؛ اوسلو، ناروے؛ کوپن ہیگن، ڈنمارک اور ماسکو، روس میں روزے کا دورانیہ 17 سے 18 گھنٹے ہوگا۔

اس کے بعد مزید نیچے آئیں تو برلن، جرمنی؛ ایمسٹرڈیم، نیدرلینڈز؛ وارسا، پولینڈ؛ لندن، برطانیہ؛ پیرس، فرانس؛ برسلز، بیلجیئم اور زیورخ، سوئٹزرلینڈ میں 16 سے 17 گھنٹے کا روزہ رکھا جائے گا۔

بخارسٹ، رومانیہ؛ اٹاوا، کینیڈا؛ صوفیہ، بلغاریہ؛ روم، اٹلی؛ میڈرڈ، اسپین؛ لزبن، پرتگال؛ ایتھنز، یونان؛ بیجنگ، چین؛ واشنگٹن ڈی سی امریکا؛ پیونگ یانگ، شمالی کوریا اور انقرہ، ترکی میں روزہ 15 سے 16 گھنٹے کا ہوگا۔

اسلام آباد، پاکستان؛ رباط، مراکش؛ ٹوکیو، جاپان، تہران، ایران؛ بغداد، عراق؛ بیروت، لبنان؛ دمشق، شام؛ قاہرہ، مصر؛ القدس، فلسطین؛ کویت؛ نئی دہلی، بھارت؛ ہانگ کانگ؛ ڈھاکا، بنگلہ دیش؛ کابل، افغانستان، ریاض، سعودی عرب؛ دوحہ، قطر؛ دبئی، متحدہ عرب امارات یعنی دنیا میں مسلمانوں کے تقریباً تمام ہی بڑے اور اہم شہروں میں روزہ 14 سے 15 گھنٹے کا ہوگا۔

یہاں سے مزید خطِ استوا کی جانب بڑھیں تو عدن، یمن؛ ادیس ابابا، ایتھوپیا؛ ڈاکار، سینیگال؛ کولمبو، سری لنکا؛ بنکاک، تھائی لینڈ؛ خرطوم، سوڈان؛ کوالالمپور، ملائیشیا؛ سنگاپور اور نیروبی، کینیا میں 13 سے 14 گھنٹے کا روزہ رکھا جائے گا۔

یہاں سے آگے بڑھیں تو جکارتہ، انڈونیشیا؛ برازیلیا،برازیل اور ہرارے، زمبابوے میں مسلمان 12 سے 13 گھنٹے کا روزہ رکھیں گے۔

اب ہمارا سفر خطِ استوا سے جنوب کی طرف ہے، جہاں روزہ چھوٹا ہوتا جائے گا۔ جوہانسبرگ اور کیپ ٹاؤن جنوبی افریقہ؛ بیونس آئرس، ارجنٹینا؛ مونٹی وڈیو، یوروگوئے؛ کینبرا، آسٹریلیا، پورٹو مونٹ، چلی اور کرائسٹ چرچ نیوزی لینڈ میں روزہ صرف 11 سے 12 گھنٹے کا ہوگا۔

اگر دنیا کے نمایاں ترین شہروں میں مختصر ترین روزہ دیکھیں تو یہ نیوزی لینڈ کا شہر کرائسٹ چرچ ہی ہوگا، جہاں رواں سال 12 مئی کو سب سے مختصر روزہ ہوگا جو صرف 11 گھنٹے اور 20 منٹ کا ہوگا اور اسی دن انتہائی شمال میں گرین لینڈ کے دارالحکومت نوک میں 19 گھنٹے 57 منٹ کا سال کا طویل ترین روزہ ہوگا۔

مزید تحاریر

ڈسکہ انتخاب کے بعد عوام بھی کہہ رہی ہے کہ گھر جاؤ، حمزہ شہباز

پاکستان مسلم لیگ ن کے نائب صدر میاں حمزہ شہباز شریف کا کہنا ہے کہ موجودہ حکمرانوں کے پاس اقتدار میں رہنے کا اب...

سندھ حکومت نے سعید غنی سے تعلیم کا قلمدان واپس لینے کا فیصلہ کرلیا

سندھ کی صوبائی حکومت میں وزیر تعلیم و لیبر سعید غنی سے محکمہ تعلیم کا قلمدان لینے کا فیصلہ کرلیا گیا، ساتھ ہی کابینہ...

ن لیگ کو چاہیے کہ پیپلز پارٹی جیسی سیاست کرے، فواد چودھری

وفاقی وزیر برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چودھری نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن احتجاجی سیاست سے باہر آکر پیپلز پارٹی جیسی سیاست...

پیپلز پارٹی کو نوٹس مسلم لیگ ن نے نہیں، پی ڈی ایم نے بھیجا تھا، مریم نواز

پاکستان مسلم لیگ ن کی نائب صدر مریم نواز کا کہنا ہے کہ جس کے لیے کہا جاتا تھا کہ سیاست ختم ہوگئی اس...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے