25.7 C
Islamabad
پیر, اگست 2, 2021

آئندہ کئی نسلوں کو وزیراعظم کی تبدیلی کی خوفناک قیمت ادا کرنی ہوگی، بلاول بھٹو

تازہ ترین

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...
- Advertisement -

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ وزیراعظم لوٹ مار کے بعد لندن بھاگ جائیں گے، آنے والی نسلوں کو وزیراعظم کی تبدیلی کی خوفناک قیمت ادا کرنی پڑے گی۔

بلاول ہاؤس کے میڈیا سیل کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق ان کا کہنا ہے کہ قیام پاکستان سے لے کر اب تک ملک میں مجموعی طور پر اتنی تباہی نہیں ہوئی ہوگی جتنی ان ڈھائی سالوں میں وزیراعظم عمران خان پھیلا چکے ہیں۔ وزیراعظم اور ان کے حواری پرویز مشرف کے نقش قدم پر چلتے ہوئے لوٹ مار کے بعد ملک کو تباہ کرکے لندن بھاگ جائیں گے۔

بلاول بھٹو نے کہا کہ ہمیں خدشہ ہے کہ اگر وزیر اعظم عمران خان اپنی مدت پوری کرگئے تو ملک دیوالیہ نہ ہوجائے۔ وزیراعظم ملک کا بدترین حال کرچکے ہیں کہ آئندہ آنے والی حکومتیں دہائیوں تک ان اس نقصان کا ازالہ نہیں کرپائیں گی۔ آئندہ کئی نسلوں کو وزیراعظم عمران خان کی تبدیلی کی خوفناک قیمت ادا کرنی پڑے گی۔

چیئرمین پیپلز پارٹی کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان کو معاشی بحران ورثے میں نہیں ملا بلکہ سلیکٹڈ حکومت نے ملک میں معاشی بحران پیدا کیا۔ جس کی باتوں کو کوئی سنجیدہ لینے کے لیے تیار نہیں، وہ کیسے ملک چلا سکتا ہے؟

بلاول بھٹو نے مزید کہا کہ کورونا وائرس کی وبا تحریک انصاف کی حکومت شروع ہونے کے بعد آئی، وزیراعظم عمران خان تو پہلے ہی ملکی معیشت کا جنازہ نکال چکے تھے۔ موجودہ حکومت میں پاکستان بدترین، سیاسی، انتظامی اور مالی بحران کا شکار ہوا ہے۔ یہاں تک کہ پی ٹی آئی کے منتخب نمائندے اب اپنے انتخابی حلقوں میں مہنگائی سے پریشان عوام سے منہ چھپاتے پھر رہے ہیں۔

مزید تحاریر

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے