36 C
Islamabad
جمعہ, جون 18, 2021

آنے والے بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہیں ضرور بڑھائیں گے، حماد اظہر

تازہ ترین

پی ٹی آئی دور میں گھوڑوں کے بجائے گدھوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے، بلاول بھٹو

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ خبردار! اگر کسی نے نالائق حکومت کے لیے ریاست مدینہ کا لفظ...

اسلام آباد میں خواتین کے لیے الگ بازار بنانے جا رہے ہیں، شیخ رشید

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ منشیات اور آئس کے ڈیلرز کو فور طور پر ختم کیا جائے، اسلام آباد...

پیٹرول کے بعد سی این جی کی قیمتوں میں بھی فی کلو 9 روپے اضافے کا امکان

آئندہ ماہ کمپریسڈ نیچرل گیس (سی این جی) کی قیمتوں میں 9 روپے فی کلو تک اضافے کا امکان، سی این جی کی موجودہ...

پی ٹی آئی حکومت کی کامیابی کا پیمانہ کیا ہو؟ – جمال عبداللہ عثمان

پیمانہ کیا ہو کہ پاکستان تحریک انصاف نے سابق تمام حکومتوں سے بہت اچھا پرفارم کیا ہے۔ یا پھر پیمانہ کیا ہو، جس سے پتا...
- Advertisement -

وفاقی وزیر توانائی حماد اظہر نے کہا ہے کہ شہروں سے تو پیپلز پارٹی نکل گئی، دیہاتوں سے بھی نکل جائے گی، مہنگائی ابھی بھی چیلنج ہے جس پر کنٹرول کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی سیاسی پوائنٹ اسکورنگ کررہی ہے۔ پنجاب اور خیبرپختونخوا کی بہ نسبت بلوچستان اور سندھ کو اس مرتبہ زیادہ فنڈز ملے ہیں۔ سندھ کی گورننس پر نظر دوڑائی جائے تو ہر طرف کرپشن ہی نظر آئے گی۔ شہروں سے تو پیپلز پارٹی کا راج ختم ہوگیا، دیہاتوں سے بھی جلد ختم ہوجائے گا۔ پیپلز پارٹی آخر کب تک اسی طرح جاگیردار کی سطح پر عوام پر حکومت کرے گی؟

حماد اظہر نے کہا کہ ماضی میں کسی حکمران کی فیصلہ سازی وزیراعظم عمران خان جیسی نہیں تھی۔ عوام کے مفاد کے لیے وزیراعظم مشکل سے مشکل فیصلہ کرنے کو تیار ہوتے ہیں۔ انہوں نے مالی سال 22-2021 کے بجٹ میں سرکاری ملازمین کی تنخواہیں بڑھانے کی یقین دہانی کرواتے ہوئے کہا کہ نئے بجٹ میں کم سے کم اجرت پر بھی نظرثانی کی جارہی ہے جبکہ انکم ٹیکس سلیب میں تبدیلی ہوگی۔ حکومت کی کوشش ہے کہ ٹیکس شرح نہ بڑھے، انکم ٹیکس سلیب کو آسان کرنے جارہے ہیں۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ مہگائی کا رجحان نیچے کی طرف جانا شروع ہوا ہے، لوگوں کی آمدن بڑھا رہے ہیں جس کے ذریعے مہنگائی پر قابو پایا جاسکتا ہے۔ روپے کی قدر گرنے سے پہلے سال مہنگائی کی شرح 14 فیصد تک گئی جبکہ مہنگائی کی شرح اُس وقت ساڑھے 8 کی سطح پر رہی۔ مہنگائی صرف پاکستان میں نہیں پوری دنیا میں ہے جس کے اسباب کورونا وائرس اور موسمیاتی تبدیلی ہیں۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین کی جانب سے 11 جون کو مالی سال 22-2021 کا بجٹ پارلیمنٹ میں پیش کیا جائے گا۔ آئندہ مالی سال کے بجٹ کا کل حجم 8000 ارب روپے کے لگ بھگ ہوگا جبکہ معیشت کا حجم 52 ہزار 57 ارب تک پہنچے گا۔

مزید تحاریر

پی ٹی آئی دور میں گھوڑوں کے بجائے گدھوں کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے، بلاول بھٹو

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا کہنا ہے کہ خبردار! اگر کسی نے نالائق حکومت کے لیے ریاست مدینہ کا لفظ...

اسلام آباد میں خواتین کے لیے الگ بازار بنانے جا رہے ہیں، شیخ رشید

وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہا ہے کہ منشیات اور آئس کے ڈیلرز کو فور طور پر ختم کیا جائے، اسلام آباد...

پیٹرول کے بعد سی این جی کی قیمتوں میں بھی فی کلو 9 روپے اضافے کا امکان

آئندہ ماہ کمپریسڈ نیچرل گیس (سی این جی) کی قیمتوں میں 9 روپے فی کلو تک اضافے کا امکان، سی این جی کی موجودہ...

پی ٹی آئی حکومت کی کامیابی کا پیمانہ کیا ہو؟ – جمال عبداللہ عثمان

پیمانہ کیا ہو کہ پاکستان تحریک انصاف نے سابق تمام حکومتوں سے بہت اچھا پرفارم کیا ہے۔ یا پھر پیمانہ کیا ہو، جس سے پتا...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے