28.2 C
Islamabad
پیر, اگست 2, 2021

پارکس اور گراؤنڈ پر جو ہزاروں گھر بن چکے ہیں، انہیں گرانے کی ہماری ہمت نہیں، سعید غنی

تازہ ترین

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...
- Advertisement -

وزیر تعلیم سندھ سعید غنی نے کہا ہے کہ سندھ حکومت کے خلاف سازشیں کی جاتی ہیں کہ ہم کام نہیں کرتے، سندھ میں سب سے زیادہ یونیورسٹیز اور اسکولز ہم نے بنائے ہیں، سندھ جیسا صحت کا نظام کسی اور صوبے میں ہے تو سامنے لائیں۔

کراچی تجاوزات کیس کے حوالے سے بات کرتے ہوئے اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ تجاوزات کے خلاف آپریشن عدالت کے حکم پر کیا جارہا ہے۔ پارکس اور گراؤنڈ پر جو ہزاروں گھر بن چکے ہیں انہیں گرانے کی ہماری ہمت نہیں ہے۔ عدالت کو چاہیے کہ قبضہ کرنے والے اصل ذمہ داروں کے خلاف کاروائی کی جائے۔ تمام جج صاحبان ہمارے لیے احترام کے قابل ہیں اگر ہماری کوئی غلطی ہے تو ہمیں بلایا جائے۔

سعید غنی نے کہا کہ متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) نے رفاعی پلاٹوں پر قبضے کرائے اور کراچی میں غلط طریقے سے لوگوں کو آباد کیا گیا۔ ملیر میں ایم کیو ایم کو 2 ہزار، بلدیہ میں 5 ہزار ووٹ ملے، ایم کیو ایم کے جہاں 80 ہزار ووٹ تھے اب 5 ہزار مل رہے ہیں۔ ایم کیو ایم غور کرے کہ کراچی والے انہیں کیوں مسترد کر رہے ہیں۔

صوبائی وزیر کا کہنا تھا کہ عدالت کو سابق ایڈمنسٹریٹر فہیم الزماں کی بات سننی چاہیئے، فہیم الزماں سے پوچھنا چاہیئے کہ یہ سب کیسے ہوا؟ انہوں نے مشورہ دیا کہ متاثرین کی دکانیں گرانے سے پہلے انہیں وقت دیا جائے تاکہ وہ متبادل دیکھیں۔ ایک دم دکانیں گرانے سے بچوں کے پیٹ پالنے والا سڑک پر آجائے گا۔

دوسری طرف ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ سوچی سمجھی سازش کے تحت کہا جاتا ہے کہ سندھ حکومت کچھ نہیں کرتی۔ کبھی پی ٹی آئی رہنما تو کبھی کوئی بڑا آدمی اس قسم کی باتیں کرتا دکھائی دیتا ہے۔ ملک کے 135 شہروں سے مریض سندھ علاج کرانے کے لیے آتے ہیں اور گزشتہ 8 سال میں 13 ہزار 75 افراد کا مفت علاج ہوا ہے۔

مزید تحاریر

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے