25.7 C
Islamabad
پیر, اگست 2, 2021

3 مرتبہ وزیراعظم بننے والے نواز شریف کاش ایسا ہسپتال بنالیتے جس پر انہیں یقین ہوتا، اسد عمر

تازہ ترین

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...
- Advertisement -

وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر کا کہنا ہے کہ شہباز شریف ضمانتی تھے تو کاش وہ نواز شریف کو بھی پاکستان واپس آنے کا کہتے۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان جیسی عوامی خدمت کسی اور لیڈر نے نہیں کی۔ ریاست مدینہ نے پہلی بار غریب کی ذمہ داری اٹھائی تھی، میں ایک ایسی پارٹی کا رکن ہوں جس کے لیڈر نے غریب طبقے کی خدمت کی۔ حکمرانوں کا کام ہوتا ہے کہ کمزور طبقےکا خیال کیا جائے۔ وزیراعظم عمران خان نے مشکل فیصلے کیے اور ہم نے ماضی کی حکومتوں کی تباہی کی داستانوں کو ٹھیک بھی کیا۔

شہباز شریف کی تقریر پر رد عمل دیتے ہوئے اسد عمر نے کہا کہ قائد حزب اختلاف کی تقریر حقائق کے برعکس تھی۔ انہیں ایوان میں کھڑے ہو کر یہ بتانا پڑا کہ انہوں نے ڈینگی میں کیا کیا۔ شہباز شریف نے ایل این جی پلانٹ پر بڑی بات کی تو میرا سوال یہ ہے کہ اگر یہ اتنے ہی سستے پلانٹس تھے تو ان کو قانون میں ترامیم کیوں کرنا پڑیں؟

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ لیگی دور میں شاید دودھ اور شہد کی نہریں بہہ رہی تھی۔ ن لیگ کے آخری سال میں زر مبادلہ کے ذخائر تیزی سے کم ہورہے تھے، جب ہم نے اقتدار سنبھالا تو ذخائر صرف 2 ہفتوں کے رہ گئے تھے۔ نواز شریف 3 مرتبہ ملک کے وزیراعظم رہے ہیں، کاش وہ ایک ایسا ہسپتال بنا لیتے جس پر خود انہیں یقین ہوتا۔

اسد عمر نے مزید کہا کہ شہباز شریف صاحب کہتے ہیں کہ اگر انہیں خیبرپختونخوا حکومت دی جاتی تو تقدیر بدل دیتے۔ انہیں یاد کراتا چلوں کہ ماضی میں اے این پی، جے یو آئی، ن لیگ اور جماعت اسلامی بھی کے پی کے میں حکومتیں کرتے رہے ہیں۔ کے پی کے والوں کو اگر حکومت کی کارکردگی پسند نہ آئے تو نکال باہر کرتے ہیں لیکن وہاں کی عوام نے ہمیں دوسری مرتبہ دو تہائی اکثریت دی ہے۔

مزید تحاریر

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے