25.7 C
Islamabad
پیر, اگست 2, 2021

دنیا کا تیسرا سب سے بڑا ہیرا دریافت

تازہ ترین

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...
- Advertisement -

افریقہ کے ملک بوٹسوانا میں ایک کمپنی نے 1,098 قیراط کا ہیرا دریافت کیا ہے، جسے اپنی نوعیت کا دنیا کا تیسرا سب سے بڑا ہیرا قرار دیا جا رہا ہے۔

کمپنی Debswana یہ پتھر یکم جون کو دریافت کیا تھا، جسے اب دارالحکومت گبورون میں صدر مملکت موکویسی ماسیسی کو دکھایا گیا ہے۔

کمپنی کے مینیجنگ ڈائریکٹر لائی نیٹ آرمسٹرونگ کا کہنا ہے کہ یہ نایاب اور غیر معمولی ہیرا بوٹسوانا کے لیے بہت معنی رکھتا ہے۔ یہ ایسی قوم کے لیے امید کی کرن ہے جو اس وقت مشکل حالات سے نمٹ رہی ہے۔

یہ اس کمپنی کی تاریخ میں دریافت ہونے والا سب سے بڑا ہیرا بھی ہے، جو حکومت بوٹسوانا اور ہیروں کے معروف عالمی ادارے De Beers کا اشتراک ہے۔

واضح رہے کہ دنیا کا سب سے بڑا ہیرا کلینن (Cullinan) ہے، جس کا وزن 3,106 قیراط ہے۔ اسے 1905ء میں جنوبی افریقہ میں دریافت کیا گیا تھا۔

دوسرا سب سے بڑا ہیرا 2015ء میں بوٹسوانا ہی میں دریافت ہوا تھا جس کا وزن 1,109 قیراط اور نام  Lesedi La Rona ہے۔

ہیروں کی پیداوار کے لحاظ سے بوٹسوانا افریقہ  میں سب سے آگے ہے۔ Debswana ملک کی سب سے بڑی ڈائمنڈ کمپنی ہے جس کی آدھی ملکیت حکومت کے پاس ہے۔ ملک کی کُل آمدنی کا 40 فیصد معدنیات کی صنعت سے آتا ہے۔ 2007ء میں ملک میں یورینیم کے وسیع ذخائر بھی دریافت ہوئے تھے۔ ہیروں اور یورینیم کے علاوہ ملک میں سونے، تانبے اور تیل کے ذخائر بھی پائے جاتے ہیں۔

ملک میں واقع ایک کان ‘اوراپا’ کو مالیت اور سالانہ ہیروں کی پیداوار کے لحاظ سے دنیا کی سب سے بڑی ہیروں کی کان کہا جاتا ہے۔ 2013ء میں یہاں سے 1.1 کروڑ قیراط سے زیادہ کے ہیرے نکلے۔ تب ایک قیراط کی اوسط قیمت 145 ڈالرز تھی، اس لحاظ سے اوراپا سے صرف ایک سال میں 1.6 ارب ڈالرز مالیت کے ہیرے نکلے۔

مزید تحاریر

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے