25.7 C
Islamabad
پیر, اگست 2, 2021

محکمہ سندھ کی صوبے بھر میں 10 روز کے لیے لاک ڈاؤن کی تجویز

تازہ ترین

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...
- Advertisement -

محکمہ صحت سندھ کی جانب سے عالمی وبا کورونا وائرس کے بڑھتے ہوئے کیسز کے باعث سندھ بھر میں 10 دنوں کے لیے لاک ڈاؤن لگانے کی تجویز دے دی گئی۔

آج بروز پیر سندھ میں کورونا ٹاسک فورس کا اجلاس ہوا جس میں کورونا کے مثبت کیسز سے متعلق بریفنگ دی گئی۔ محکمہ صحت سندھ نے بتایا ہے کہ اس وقت کراچی میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران 1236 نئے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ کیسز بڑھنے سے شرح 23 فیصد تک جا پہنچی ہے۔

اس حوالے سے ترجمان سندھ حکومت مرتضیٰ وہاب نے کہا ہے کہ اگر سخت فیصلے کرتے ہیں تو کچھ لوگ سیاست چمکانے آجاتے ہیں۔ سندھ حکومت نے عوامی مقامات پر ماسک پہننا لازمی قرار دے ديا ہے۔

دوسری طرف پارلیمانی سیکرٹری صحت ڈاکٹر نوشین حامد کا کہنا ہے کہ کورونا کی ڈیلٹا قسم کا پھیلاؤ تشویش ناک ضرور ہے لیکن ابھی تک اس سے کوئی ہلاکت رپورٹ نہیں ہوئی۔ ڈاکٹر نوشین حامد کے مطابق کوئی بھی ویکیسن 100 فیصد کارآمد نہیں ہے البتہ ویکسین لگوانے والے افراد اگر ڈیلٹا کا شکار ہو بھی جائیں تو وائرس کے اثرات کی شدت کم ہوگی۔

خیال رہے کہ کورونا وائرس کی نئی قسم ڈيلٹا کا پھيلاؤ شديد ہونے کے باعث ملک بھر میں نئے مثبت کیسز میں 50 فیصد ڈیلٹا کے کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ این سی او سی کے مطابق گزشتہ روز ملک بھر میں 48 ہزار 800 سے زائد نئے کورونا ٹیسٹ ہوئے اور 2 ہزار 607 مثبت کیسز رپورٹ ہوئے ہیں جن میں سے 50 فیصد ڈیلٹا کے کیسز سامنے آئے۔

اس سلسلے میں ماہرین نے خبردار کیا ہے کہ ڈیلٹا سے متاثر ایک مریض کم ازکم 4 دیگر افراد کو متاثر کر رہا ہے۔

مزید تحاریر

مقبوضہ کشمیر کے تاجر، پاک-بھارت تجارت شروع ہونے کے منتظر

صرف دو سال پہلے عامر عطا اللہ کہتے تھے کہ پاکستانی سرحد کے قریب واقع قصبہ اُڑی میں تاجر کی حیثیت سے ان کا...

گزشتہ 75 سالوں میں آبدوزوں کے صرف 2 شکار، ایک پاکستانی آبدوز نے کیا

دوسری جنگِ عظیم کے دوران دشمن کے بحری جہازوں کو تباہ کرنے میں آبدوزوں نے بہت اہم کردار ادا کیا تھا۔ نازی جرمنی کی...

گھانا کی نئی قومی مسجد ایک اہم سیاحتی مقام بن گئی

مغربی افریقہ کے ملک گھانا کی نئی قومی مسجد ایک مقبول سیاحتی مقام بن گئی ہے اور نہ صرف مسلمان بلکہ غیر مسلم بھی...

تیل کا اخراج، تاریخ کے سب سے بڑے حادثات

اِس وقت کراچی کے ساحل پر ایک بحری جہاز 'ایم وی ہینگ ٹونگ 77' پھنسا ہوا ہے۔ گو کہ یہ ایک کنٹینر شپ ہے...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے