26 C
Islamabad
ہفتہ, ستمبر 18, 2021

60 سال میں پہلی مرتبہ کسی وزیراعظم نے عوام کو عزت دی، چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ

تازہ ترین

بھارت میں موجود افغان مہاجرین مظاہروں پر مجبور ہو گئے

بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی میں موجود افغان مہاجرین ہفتہ بھر سے اقوام متحدہ کے ادارہ برائے مہاجرین (UNHCR) کے دفتر کے باہر احتجاج...

دنیا کا سب سے بڑا ‘ٹائروں کا قبرستان’ ختم کر دیا گیا

کویت کے صحرا میں 4.2 کروڑ سے زیادہ پرانے ٹائرز ری سائیکل ہونے کے انتظار میں پڑے ہوئے تھے کہ جسے دنیا کا سب...

پاکستان 2023ء میں 5جی لانچ کرے گا

پاکستان وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی و ٹیلی کام 2023ء تک ملک میں جدید ترین 5جی ٹیکنالوجی لانے کا ہدف رکھتی ہے۔ ملک میں گزشتہ تین سال...

بٹ کوائن کو بطور کرنسی قبول کرنے والا دنیا کا پہلا ملک

ایل سیلواڈور لاطینی امریکا میں واقع ایک ملک ہے، جس نے مشہور ڈجیٹل کرنسی 'بٹ کوائن' کو قانونی حیثیت دے دی ہے اور یہ...
- Advertisement -

چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے کہا ہے کہ جس معاشرے میں سچی گواہی دینا ناپید ہوجائے اور جرم کا ارتکاب دیکھ کر منہ پھیر لیا جائے تو عدالتی نظام بے بس ہو جاتا ہے۔

اسلام آباد میں ڈسٹرکٹ کورٹس کی عمارت کے سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میں اپنی اور عدلیہ کی جانب سے وزیراعظم عمران خان کو مبارکباد پیش کرتا ہوں۔ 60 سال میں پہلی مرتبہ کسی وزیراعظم نے عوام اور سائلین کو عزت دیتے ہوئے ان کے حقوق کو تسلیم کیا۔ ریاست کی طرف سے وزیراعظم نے ادھوری تاریخ کو مکمل کرنے کا ذمہ لیا ہے۔

اطہر من اللہ نے کہا کہ میں بھی وزیراعظم عمران خان کو اسلام آباد ہائی کورٹ اور عدلیہ کی طرف سے یقین دہانی کراتا ہوں کہ ہم ان شاء اللہ کسی بھی شہری کو سستے اور فوری انصاف کے حق سے محروم نہیں ہونے دیں گے۔ وزیراعظم اس تحریک اور سفر میں ہمیں کسی صورت پیچھے نہیں پائیں گے۔ سستے اور فوری انصاف کی فراہمی کے لیے ریاست کے تمام ستونوں کو یکجا ہونے سے ہی ممکن ہے۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ ہمیں اس بات کو بھی یقینی بنانا ہوگا کہ ہر ادارہ اپنے دائرہ کار میں رہتے ہوئے عوام اور سائلین کے لیے سستے اور فوری انصاف کے لیے اپنا کردار ادا کرے۔ یہ جدوجہد فقط عدلیہ تک محدود نہیں رہ سکتی بلکہ عدالت نظامِ عدل میں صرف ایک اکائی ہے۔ تحقیقاتی ادارے اپنے فرائض پیشہ ورانہ طور پر نبھانے میں ناکام رہے تو مجرموں کا احتساب ممکن نہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ ججز بحالی تحریک کے قائدین نے عوام کو سنہرا خواب دکھایا تھا کہ ریاست ماں جیسی ہوگی اور ماں کی طرح اپنے عوام کے مفادات اور حقوق کا تحفظ کرے گی۔ اس تحریک میں ججز صاحبان تو بحال ہوگئے لیکن تحریک کے مقاصد پایہ تکمیل تک نہ پہنچ سکے۔ آج بھی ایک لمبا سفر باقی ہے۔ ہمیں عوام کے سامنے یہ بات ثابت کرنی ہوگی کہ ریاست عوام جیسا تحفظ کرتی ہے۔

واضح رہے کہ آج وزیراعظم عمران خان کی جانب سے اسلام آباد میں ڈسٹرکٹ کورٹس کمپلیکس کی عمارت کا سنگ بنیاد رکھ دیا گیا۔ ایف ایٹ کچہری کی تمام عدالتیں کورٹس کمپلیکس میں منتقل ہوں گی۔ 93 عدالتیں کام کریں گی، بخشی خانہ تعمیر ہوگا اور پارکنگ کے لیے بھی جگہ مختص ہوگی۔ یہ منصوبہ 6 ماہ کی قلیل مدت میں مکمل کرنے کی ڈیڈلائن دی گئی ہے۔ 

خیال رہے کہ کچھ ماہ قبل کیپٹل ڈیولپمنٹ اتھارٹی (سی ڈی اے) کی طرف سے اسلام آباد کے سیکٹر ایف-8 میں موجود کچہری کو غیر قانونی قرار دے کر وہاں کے چیمبرز توڑ دیے گئے تھے۔ سی ڈی اے کا کہنا تھا کہ اسلام آباد کچہری میں موجود زیادہ تر چیمبرز غیر قانونی طرز پر بنائے گئے تھے جس کے بعد ایف-8 میں موجود غیر قانونی اسلام آباد کچہری کو سیکٹر جی-10 ہائی کورٹ کی جگہ منتقل کیے جانے کا امکان ظاہر کیا گیا تھا۔

یہ بھی ذہن میں رہے کہ چیمبرز توڑے جانے پر وکلا احتجاج کرتے ہوئے اسلام آباد ہائی کورٹ میں داخل ہوگئے تھے جہاں انہوں نے شور شرابہ بھی کیا تھا اور چیف جسٹس بلاک کی کھڑکیاں توڑیں تھیں۔ اس کے علاوہ ہائی کورٹ کے باہر موجود گملوں اور ایڈمن بلاک کے شیشوں کو بھی نقصان پہنچایا تھا۔ بعد ازاں انتظامیہ کی کال پر پولیس کی بھاری نفری موقع پر تعینات کردی گئی تھی۔

مزید تحاریر

بھارت میں موجود افغان مہاجرین مظاہروں پر مجبور ہو گئے

بھارت کے دارالحکومت نئی دہلی میں موجود افغان مہاجرین ہفتہ بھر سے اقوام متحدہ کے ادارہ برائے مہاجرین (UNHCR) کے دفتر کے باہر احتجاج...

دنیا کا سب سے بڑا ‘ٹائروں کا قبرستان’ ختم کر دیا گیا

کویت کے صحرا میں 4.2 کروڑ سے زیادہ پرانے ٹائرز ری سائیکل ہونے کے انتظار میں پڑے ہوئے تھے کہ جسے دنیا کا سب...

پاکستان 2023ء میں 5جی لانچ کرے گا

پاکستان وزارت انفارمیشن ٹیکنالوجی و ٹیلی کام 2023ء تک ملک میں جدید ترین 5جی ٹیکنالوجی لانے کا ہدف رکھتی ہے۔ ملک میں گزشتہ تین سال...

بٹ کوائن کو بطور کرنسی قبول کرنے والا دنیا کا پہلا ملک

ایل سیلواڈور لاطینی امریکا میں واقع ایک ملک ہے، جس نے مشہور ڈجیٹل کرنسی 'بٹ کوائن' کو قانونی حیثیت دے دی ہے اور یہ...

جواب دیں

اپنا تبصرہ لکھیں
یہاں اپنا نام لکھئے